Connect with us

Urdu Shayari

Khoobsurat Poetry in Urdu

میں تو وہ شہزادی ہوں صاحب 

جو محلوں پہ نہیں دلوں پہ راج کرتی ہے

😉🔥Ma to wo sehzadi hon🔥😍

Sahib😎

💕💕jo mehlon pay nahi dillon pay raj karti hay💓💕💞

 

○●○●○●○●○●○●○●

پھول نما شخص پہ غزل کیا لکھ ڈالی

بیٹھ گئیں تتلیاں میری کتاب پر آکر




🌹🌹Phool numashaks pay ghazal kya likh dali🌹🌹

🌼🌸💮bath gain tatliyn mari katab par aa kar💮🌹💞

 

○●○●○●○●○●○●○●

تیرے ہونٹوں پر تل اس خریدنے کی اوقات نہیں 




مکمل کون خریدے گا تجھے 

💋💋taray honton par till usy kharidnay ki okat nahi💋💋

💋💋muqamal kon khareeday ga tujahy💋💋

○●○●○●○●○●○●○●

‏بہت تعریف کرتا تھا میں اس کی چوڑیوں کی 

مگر لفظ کم پڑ گئے جب اس نے جھمکے پہنے

🌼🌸💮Bohat tareef karta tha ma us ki churiyon kii🌼💮🌷

🌼🌸💮magar lafz kam par gay jab us nay jhumkay pehnay🌷🌼🌸💮

○●○●○●○●○●○●○●

کھلی زلفیں گلابی ہونٹ اور غضب کی آنکھیں 

آپ ویسے ہی جان مانگ لیتے اتنا اہتمام کیوں

💕💞🌹🌼khuli zulfai gulabi honth or ghazab ki ankhain💕🌹💞

💕💓ap wasy he jan mang katay itna 💓💕💞ehtimam kuy

 

○●○●○●○●○●○●○●

وہ آئے بزم میں اتنا تو نے دیکھا

پھر اس کے بعد چراغوں میں روشنی نہ رہی

🌼🌸💮wo aayn bazam ma itna tunay dakha🌼🌸💮

💮🌸🌼ohir us kay bad cherajon ma roshni na rahi❤️🌼🌸

 

○●○●○●○●○●○●○●

تجھ نازنیں سے زلفیں سنبھالی نہیں جاتی 

گرتی ھیں دائیں آنکھ تو کبھی بائیں آنکھ پر

🌼🌸💕Tujh nazneen si zulfain sambaki nahi jatii🌼🌸💕

🌼🌸💕girtii hain daiyn ankh to kabi baiyn ankh par🌼🌸💕

 

○●○●○●○●○●○●○●

کالی چوڑیاں لگتی ہیں اس کے گورے بازو پہ ایسے

جیسے چاند پہ رکھ دئیے ہوں کچھ پھول گلاب کے

❤️💓❤️kali churiyan lagti hain ys kay goray bazu pay aasy❤️💓🌼

🌼💓❤️jasy chand pay rakh deyan hon kuch phool ghulab kay❤️💓🌼

○●○●○●○●○●○●○●

لال چوڑیاں لگتی ہیں اس کے گورے بازو پہ ایسے

جیسے چاند پہ رکھ دئیے ہوں کچھ پھول گلاب کے

💜❤️💓Lall churiyan lagti hain ys kay goray 🌺❤️💜bazu pay aasy

🌼🌼🌸jasy chand pay rakh deyan hon kuch phool ghulab kay💓💓🌼

 

○●○●○●○●○●○●○●

‏وہ کہنے لگی مجھے ہتھیلی پر چاند چاہیے؟ 

تو میں نے اپنے دونوں ہاتھ اُس کی گالوں پر رکھ دیئے؟

🌝🌙Wo kehnay lagi mujhay hatheli par chand cheya🌙🌝

🌞🌞to ma nay apnay dono hath us ki galon par rakh deyan🌞🌞

●○●○●○●○●○●○●

اے چاند اپنے حسن پر غرور نہ كر 

تو ميرے محبوب كے اترے ہوۓ ناخن کا حصہ ہے

🌙🌝Ayy chand apnay husn par gharoor naa kar🌝🌙

🌝🌸🌝Tu maray mehboob kay utary hovay nakhun ka hisa hay🌝🌸🌝

○●○●○●○●○●○●○●

ہمیں تو ان کی سادگی لے ڈوبی 

حسن کیا ہوتا ہے میرا خدا جانے

😂🌼🌺Hamay to us ki sadgii lay dubii💞🌹😉

😉😁🌹husan kya hota hay mera Khuda janay🌸🌷❤️

 

○●○●○●○●○●○●○●

کوئی کتنا حسین ہو صاحب

 نا مکمل ضرور ہوتا ہے

😴😴koi kitna haseen ho Sahib😴😴

😢na namukamal zaroor hota ha😢

○●○●○●○●○●○●○●

اترے ہوئے حجاب میں دیکھو کبھی اسے 

پھیکے لگیں گے رنگ تمہیں سب بہار کے

utary hovay hijab ma dakhaon kabi usy

pheekay lgain gay rang tumay sab bahar kay

 

○●○●○●○●○●○●○●

کیا تمہاری کمر میں درد نہیں ہوتا؟ 




اتنا حسن اٹھائے پھرتی ہو

kya tumari kamar ma dard nahi hota

itna husn uthay phirtii ho

 

○●○●○●○●○●○●○●

تم نے پہنی تو خوبصورت لگی 

ہائے یہ نتھلی سنار کی کہاں خوبصورت تھی

Tum nay oehni to khubsurat lagii

hayee

ya nathlii sunar ki kahan khoobsurat thi

 

○●○●○●○●○●○●○●

ان کی مست آنکھیں توبہ 

جیسے کے دو پنکھڑیاں ہوں گلاب کی 

Un ki mast ankhain Tobaa

jasy kay doo pankhriyn ho gulab kii

 

○●○●○●○●○●○●○●

آج پھر وہ نکلے ہیں بےنقاب شہر میں

آج پھر کفن کی دکان پہ رش ہو گا

Aj phir wo niklay hain bay niqab sehar ma

aj phir kafan ki dukan pay rash ho ga

 

○●○●○●○●○●○●○●

بڑی طلب تھی صنم کو بے نقاب دیکھنے کی 

دوپٹہ جو گرا تو کمبخت زلفیں دیوار بن گئیں

Bari talab thi sanam ko bay niqab dakhnay ki

duoata jo gira to kambakht zulfain dewar ban gain

 

○●○●○●○●○●○●○●

گلاب جیسی ہو گلاب لگتی ہو

ہلکا سا بھی مسکراؤ تو لا جواب لگتی ہو

Gulab jasi ho gulab lagti ho

halka sa be muskuroy to laa jawab lagti ho

 

○●○●○●○●○●○●○●

کیا تم نے دیکھا ہے چمکتا چاند؟ 

میں نے دیکھا ہے یہ منظر سیلفی لیتے ہوئے.

Kya tum nay dakha ha chamkta chand

ma nay dakha hay ya munzir selfii latay hovay

 

○●○●○●○●○●○●○●

‏حسن کو پردے کی کیا ضرورت ہے 

See also  Eid poetry in urdu

جو دیکھ لیتا ہے وہ کہاں ہوش میں رہتا ہے

Husn ko parday ki kya zaroort hay

jo dakh leta hay wo kahan hosh ma rehta hay

 

○●○●○●○●○●○●○●

یہ چاند تارے فدا ہوں تجھ پر 

الٹ دے تو جو نقاب جاناں

بہار ساری نثار تجھ پر

ہے چیز کیا یہ گلاب جاناں 

Ya chand taray fida hon tujh par

ulat day tu niqab janaaa

bahar sari nisar tujh par

hay cheez kya ya ghulab janaa

○●○●○●○●○●○●○●

یہ آٸینے تجھے تیری خبر نہ دے سکے گے

آ دیکھ میری آنکھوں میں کہ تو کتنا حسین ہے

ya aina tujhay tari khabar na day sakay gaa

aaa dakh mari ankhon ma kay tu kitna haseen kay

○●○●○●○●○●○●○●

نگاہیں یار کی کیا تعریف کروں 

جب بھی دیکھوں تو ڈوب جاتا ہوں 

Nighain yar ki kya treef karon

jab be dakhon to doob jata hon

 

○●○●○●○●○●○●○●

ہوگا مشہور اس زمانے میں حسن حوروں کا

مگر لال سوٹ پہن کر ہم بھی کمال لگتے ہیں

Ho gaa mashoor us zamany ma husn hooron ka

magar lall suit phen kar ham be kamal lagtay hain

 

○●○●○●○●○●○●○●

ان کے لب اور وفا کی قسم 

ہاۓ کیا قسم تھی خدا کی قسم

un kay lab or waja ki qasam haye kya qasam thi Khuda ki qasam

 

○●○●○●○●○●○●○●

وہ اتنا پیارا ہے کہ 

اسے دیکھتے ہوئے سب سے مشکل کام 

پلکیں جھپکانا لگتا ہے 

wo itna oyara hay kay

usy dakhtay hovay sab say muskil kam

paklain jhapkhna lagta hay

 

○●○●○●○●○●○●○●

مانا کے حسن کے بادشاہ ہو تم مگر ہم بھی سادگی میں کمال رکھتے ہیں

mana kay husn kay badshaa ho tum magar ham be sadgii

ma kamal rakhtay hain

 

○●○●○●○●○●○●○●

آج وہ پھر نکلے ہیں بے نقاب شہر میں 

آج پھر کفن کی دکان پے رش ہوگا

Aj wo phir niklay hain bayniqab sehar ma

aj phr kafan ki dukan pay rash ho gaa

 

○●○●○●○●○●○●○●

کتنے چہروں سے یہ مسکان چھین لیتے ہیں

پھر اہل حسن غضب کے مسکراتے ہیں 

Kitnay chehron say ya muskan cheen latay hain

phir Ehl e husn ghazab kay muskuraty hain

 

○●○●○●○●○●○●○●

آئے وہ نقاب اتار کے میرے مزار پہ 

مجھ سے نصیب اچھا ہے میرے مزار کا

Aayn wo niqab utar kay maray mezar pay

mujh say naseeb acha hay maray mezar kaa

 

○●○●○●○●○●○●○●

ایک سو سولہ چاند کی راتیں 




ایک تمھاری گردن کا تل ہائے

ak Soo solaa chand ki ratain

ak tumari gardan ka till Hayee

 

○●○●○●○●○●○●○●

یہ سیاہی یہ سفیدی یہ گلابی ڈورے 

کس قدر موت کا سامان ہے تیری آنکھوں میں 




Ya sayahi ya safadi ya gulabi kay dorayy

kis qadar moat ka saman hay tari ankhaon ma

 

○●○●○●○●○●○●○●

خوبصورتی کا تعلق 

نظر سے کم اور دل سے زیادہ ہوتا ہے

khoobsuratii ka talaq

nazar say kam or dill sa zayda hota hay

 

○●○●○●○●○●○●○●

تجھے لکھ پانا کہاں ممکن ہے 

اتنے خوبصورت تو لفظ نہیں میرے پاس




Tujhay likh pana kahan mumkin hay

itnay khoobsurat to lafz nahi maray pass

○●○●○●○●○●○●○●

جو قیدی ہوں زلف یار کے 

زنجیر کی وہ حاجت نہیں رکھتے.

Jo qadii hon zulf yar kay

zanjeer ki wo hajat nahi rakhtay

 

○●○●○●○●○●○●○●

حیا کی کشش حسن سے زیادہ ہوتی ہے

haya ki kashishh say zayda hoti hay

○●○●○●○●○●○●○●

قیامت ہے ظالم کی نیچی نگاہیں

خدا جانے کیا ہو جو نظریں اٹھا لیں

Qayamat hay zalim ki neechi nighain

khuda jany kya ho jo nazrain utha lainn

 

○●○●○●○●○●○●○●

حسن دیکھوں گا تمہاری آنکھوں کا 

کچی نیند سے تمہیں جگا کر

husn dakhaon ga tumari ankhon ka

kachii neend say tumay jhaga kar

 

○●○●○●○●○●○●○●

اٹھاتے ہیں نظریں تو گرتی ہے بجلی

ادا جو بھی نکلی قیامت ہی نکلی

uthanaty hain nazrain to girtii hain bijlii

Ada jo be niklii qayamat he niklii

 

○●○●○●○●○●○●○●

اس نے جب پھول کو چھوا ہوگا 

ہوش خوشبو کے اڑ گئے ہونگے

us nay jab phool ko chuwa hoo ga

hosh khushbu kay urr gay hon gay

 

○●○●○●○●○●○●○●

میں تو کہتی ہوں یوں ہی رہنے دو درہم برہم

خوب لگتی ہیں تیری زلفیں بکھر کر ہم کو.

Ma to khati hon yoon hi rahnay do darhum barham

Khoob lagti hn tari zulfayin bhikhar kar hum

○●○●○●○●○●○●○●

ساری دنیا کا حسن دیکھا ہے 

پھر بھی لاجواب لگتے ہو

Sari dunia ka hussan dekha h

See also  Sharo shayri

Phir b lajawab lagtay ho

○●○●○●○●○●○●○●

ہو نہ جائے حسن کی شان میں گستاخی کہیں 

تم چلے جاو کہ تمہیں دیکھ کر پیار آتا ہے

Ho na jaya husan ki shaan ma gustakhi kahain

Tum chalay jayo kay tumhay dekah kar payaf ata ha

○●○●○●○●○●○●○●

اس کے گاؤں کا حسن مت پوچھو 

چاند کچے مکاں میں رہتا ہے

Is kay gawaon ka hussan mat pocho

Chand kachay makan mae rahta h

○●○●○●○●○●○●○●

آپ کے بے حجاب ہونے تک 

ہم بھی شامل تھے ہوش والوں میں

Ao ky by hijab hiny tak

Hum bhi shamil thi hoshe walon ma

○●○●○●○●○●○●○●

‏ان کے ہونٹوں پہ بیٹھ کر تتلی 

سرخ پھولوں کو بھول جاتی ہے.

In ky honton pay beath kar totli

Surakh phoolon ko bhool jati ha

○●○●○●○●○●○●○●

لگ نه جائے کہیں بیتاب ستاروں کی نظر

چاند سے چہرے کو آنچل میں چھپا کر سونا

Lag na jaya kahain betab sataron ki nazar

Chand say charay ko anchal ma chupa kar sona

○●○●○●○●○●○●○●

ہزاروں بن سنور کے بھی آجائیں تو بھی کوئی مقابلہ نہیں

تمہاری سادگی میں جو حسن ہے وہ اپنی ہی ادا رکھتا ہے

Hazaron ban sanwar kay bhi ajayin to bhi koi muqabla nae

Tumhari sadgi ma jo hussan ha wo apni hi ada rakhata h

○●○●○●○●○●○●○●

اٹھاتے ہیں نظریں تو گرتی ہے بجلی

ادا جو بھی نکلی قیامت ہی نکلی

❤️🥀💘Othayty hn nazrayin to girti hn bijli❤️💘🔥

🔥❤️🔥Ada jo b nikli qayamat hi nikli

❤️🔥💋

○●○●○●○●○●○●○●

اس نے جب پھول کو چھوا ہوگا 

ہوش خوشبو کے اڑ گئے ہونگے

💘🥀Is nay jab phool ko chowa ho ga💋

🥀🔥Hose khushboo kay orr gaya hon gay💋💘🥀

○●○●○●○●○●○●○●

میں تو کہتی ہوں یوں ہی رہنے دو درہم برہم

خوب لگتی ہیں تیری زلفیں بکھر کر ہم کو

🔥😍❤️Ma to kahti hon yoon hi rahnay do darhum barhum🔥😍❤️

💯😍❤️khoob lagti hn tari zulfayin bikhar kar hum ko❤️💯💋○●○●○●○●○●○●○●

ساری دنیا کا حسن دیکھا ہے 

پھر بھی لاجواب لگتے ہو

🔥😍❤️Sari dunia ka hussab dekha ha😍❤️🔥

💋😍❤️Phir bhi lajawab lagty ho😍🔥❤️

○●○●○●○●○●○●○●

ہو نہ جائے حسن کی شان میں گستاخی کہیں 

تم چلے جاو کہ تمہیں دیکھ کر پیار آتا ہے

💋🔥😍Ho na jaya hussan ki shan ma gustakhi kahain💯💋🔥

💋💕💓Tum chalay jayo kay tumhay deakh kar payar ata💕💋💓 ha

○●○●○●○●○●○●○●

اس کے گاؤں کا حسن مت پوچھو 

چاند کچے مکاں میں رہتا ہے

💕🔥😍Is kay gawon ka hussan mat pocho💓💕❤️

💕💓❤️Chand kachay makan ma rahta. Ha💓💕❤️💋

○●○●○●○●○●○●○●

آپ کے بے حجاب ہونے تک 

ہم بھی شامل تھے ہوش والوں میں

💋💋Ao ko be hijab hony tak💋💕❤️

💓💋💕Hum bhi shamil thy hose walon mai💓💋💕❤️

○●○●○●○●○●○●○●

‏ان کے ہونٹوں پہ بیٹھ کر تتلی 

سرخ پھولوں کو بھول جاتی ہے

💋💋💋In ky honton pay beath kar titli💋💋💋

🌹🌹🌹Surakh pholon ki bhi bhool jati ha💕💓❤️🥀💋

○●○●○●○●○●○●○●

لگ نه جائے کہیں بیتاب ستاروں کی نظر

چاند سے چہرے کو آنچل میں چھپا کر سونا

🌹💓💕Lag na jaya kahain betab sataron ki nazar🌹🔥💕💓

🌻🌷🌻🌷chand say charay ko anchal ma chupa kar sona🌻🌸🌻○●○●○●○●○●○●○●

ہزاروں بن سنور کے بھی آجائیں تو بھی کوئی مقابلہ نہیں

تمہاری سادگی میں جو حسن ہے وہ اپنی ہی ادا رکھتا ہے

🌻🌷🌸Hazaron ban sanwar kay bhi ajayin to bhi muqabla nae😍😍

🔥🔥Tumhari sadgi ma jo hussan ha wo apni hi ada rakhta ha🌹🔥🌹

○●○●○●○●○●○●○●

پہلے تو اس کی پازیب ہی جان لیوا تھی 

اُوپر سے اس نے پاؤں پر مہندی بھی لگا لی

💞💕💓Phaly to is ki pazaib hi jan leva thi💕💞💓

💜💜💜Oper say is nay payon par mahndi bhi laga li💜💜💜

○●○●○●○●○●○●○●

‏ہم بھی گئے تھے اظہار محبت کرنے

ابھی تک پھولوں کی خوشبو ہمارے جسم سے آتی ہے

💞❤️💓Hum bhi gaya thy izhar muhabat karnay❤️💕💓

🌹🌹🌹Abhi tak pholon ki khushbu hamray jisam say ati🌼🌸💮 ha○●○●○●○●○●○●○●

کھلنا گلاب کا نہیں ہرگز کوئی دلیل

وہ مسکرا رہے ہیں تو سمجھو بہار ہے

Khulna gulab ka nae hargiz koi daleel

wo muskara rahy hn to samjo bahar

ha

○●○●○●○●○●○●○●

سر سے گرتی ہیں تو شانوں سے الجھ جاتی ہیں 

تو نے زلفوں کو بڑا سر پہ چڑھا رکھا ہے

Sir say girti hn to shano say oljh jati hn

To ny zulfon ko bara sir pay chara rahaka h

○●○●○●○●○●○●○●

کالا جوڑا پہن کر نکلے ہیں ہم

خدا دل کے مریضوں کی خیر کرے

Kala jora pahan kar niklay hn hum

Khuda dill ky mareezon ki khaber kary

○●○●○●○●○●○●○●

حسن تیرا قاتل ہوگا مگر سن 

مسکراہٹ ہم بھی قیامت رکھتے ہیں

See also  Poetry on father in urdu

Hussan tera qatil ho ga mager sun

Muskarahat hum bhi qayamat rahkay hn

○●○●○●○●○●○●○●

تل ہونٹ پہ تو جچتا ہی ہے 

مگر گردن پہ اس کا جواب نہیں

Till hont pay to jachta hi ha

Mager gardan pay is ka jawab nae

○●○●○●○●○●○●○●

اچھی صورت کو سنوارنے کی ضرورت کیا ہے 

سادگی میں بھی قیامت کی ادا ہوتی ہے

❤️🔥Achi surat ko sanwarnay ki zarort kiya ha❤️🔥

🥀❤️Sadgi ma bhi qayamat ki ada hoti ha🥀❤️

🔥🔥

○●○●○●○●○●○●○●

قیامت ہے تیرا یوں بن سنور کے سامنے آنا

ہمارے دل کی چھوڑ آئینے پہ کیا گزرتی ہو گی

Qayamat ha tara yoon ban sanwar kay samnay ana

Hamray dill ki chore ainay pay kiya guzarti ho gi

○●○●○●○●○●○●○●

ادائیں ان کی کرتی ہیں پریشان مجھ کو 

نظر جھکا کے مسکرانا ان کا جان لیتا ہـے




Adayin in ki karti hn preshan muj ko

Nazra jhuka kay muskarana in ka jab leta ha

○●○●○●○●○●○●○●

آنکھیں ہیں نشیلی چہرہ ہے نورانی

چلتی ہے جب لگتی ہے پوری دنیا کی رانی

Ankahyin han nashili chara ha norani

Chalti ha jab lagti ha pori dunia ki rani

○●○●○●○●○●○●○●

بہت تعریف کرتا تھا وہ میری چوڑیوں کی 

لفظ کم پڑ گئے جب میں نے جھمکے پہنے

Buht tareef karta tha wo mari choriyon ki

Lafaz kam par gaya jab ma nay jhumkay phanay

○●○●○●○●○●○●○●

کس نے کہا لوگ آنکھوں پر مرتے ہیں

میں تو اس کے حجاب پر ہی مر گیا

Kis nay kaha loag ankhon pay martay hn

Ma to is kay hijab par hi mar gaya

○●○●○●○●○●○●○●

‏جو پردوں میں خود کو چھپائے ہوئے ہیں 

‏قیامت وہی تو اٹھائے ہوئے ہیں

Jo pardon ma khud ko chupaya hoaya hn

Qayamat wohi to otahya hoya han

○●○●○●○●○●○●○●

بڑی خواہش تھی صنم کو بے نقاب دیکھنے کی 

ڈوپٹہ جو گرا کمبخت زلفیں دیوار بن گئیں

Bari khawsish thi sanam ko be naqab

dekhay ki dopata jo gira kambakhat

zulfayin dewar ban gayin

○●○●○●○●○●○●○●

 رخسار پہ تو قابل برداشت ہے لیکن 

اک حشر برپا ہے کہ تل ہونٹ پہ ہے

Rukhsar pay to qabil berdash ha lakin

Ik hashar berpa ha ky till hont pay ha

●○●○●○●○●○●○●

‏رخسار پہ تو قابل برداشت ہے لیکن؟ 

اک حشر برپا ہے کہ تل ہونٹ پہ ہے

Rukhsar pay to qabil berdash ha lakin

Ik hashar berpa ha ky till hont pay ha

○●○●○●○●○●○●○●

ان کو نقاب میں دیکھ کر پتھر بھی پگھل جاتے ہیں

ناجانے اس آئینہ پر کیا گزرتی ہوگی 

جو روز انہیں بے نقاب دیکھتا ہوگا

In ko naqab ma deakh kar phater bhi pighal jatay hn

Na janay is ainay par kiya guzarti hi gi

Jo roaz inhayin bay naqab dekhta ho ga

○●○●○●○●○●○●○●

کیسے کروں بیاں اس کے چہرے کی نازکی 

ہم تو اس کی آنکھوں میں الجھ بیٹھے ہیں

Kesay karon beyan is charay ki nazki

Hum to is ki ankhon mai olajh betahy hn

○●○●○●○●○●○●○●

‏مانا کہ چرچے ہیں تری خوبصورتی کے چار سو

آ دیکھ ہماری سادگی کہ قصے بھی کچھ کم نہیں

Mana kay charchay han tari khubsurti kay char soo

A deakh hamri sadgi kay qissay bhi kuch kam nae

○●○●○●○●○●○●○●

تیرے نچلے ہونٹ میں جاناں 

دنیا کا آدھا فساد چھپا ہوا ہے

Taray nichlay hont ma jana

Dunia ka adha fasad chupa hoa ha

○●○●○●○●○●○●○●

تمہاری تصویر کے لیے دنیا کا سب سے خوبصورت فریم میری آنکھیں ہیں

Tumhari tasveer kay liya dunia ka sab say khubsurt faraim mari ankhyin han

○●○●○●○●○●○●○●

زبان سے اگر نہ کر سکو تعریف ہماری 




تو نظروں سے ہی ماشااللہ کہہ دینا

Zuban say ager na kar sako tareef hamri

To nazron say hi MashaAllah kha dena

○●○●○●○●○●○●○●

مجھے پیاری لگتی ہے تیری ہر اک ادا

تجھے ہر آفت سے محفوظ رکھے خدا

Muja payari lagti ha trai har in ada

Tujay hr afat say mahfoz rakhy khudh

○●○●○●○●○●○●○●

مضمون لکھ رہی تھی میں کل شب گلاب پر 

پھر یوں ہوا کہ ہونٹ تیرے یاد آ گئے

Mazmoon likh rahi thi

Ma kal shab gulab par

Phir yoon hoa kay hont taray yad a gaya

○●○●○●○●○●○●○●

حیا کی کشش

حسن سے زیادہ ہوتی ہے

Haya ki kashis

Hussan say zayda hoti ha

○●○●○●○●○●○●○●

کھلنا غضب ہوا تیری زلف دراز کا

پھندہ گلے میں ڈال کر حسرتیں لٹک گئیں

Khulna gazab hawa tari zulaf daraz ka

Phanda gally ma dall kar hasratyin latak gayin

○●○●○●○●○●○●○●

Click to comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.